گھر تعمیر کرنا ایک خواب بن گیا ، گھر تعمیر کرنے والے شہریوں کی مشکلات میں اضافہ

گھر تعمیر کرنا ایک خواب بن گیا ، گھر تعمیر کرنے والے شہریوں کی مشکلات میں اضافہ

موجودہ دور میں گھر بنانا عام شہری کے لیے ایک خواب بن گیاہے۔ گھر بنانے کے خواہشمند شہریوں کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوگیا ہے۔ پنجاب کے صوبائی دارالحکومت لاہور میں بلڈنگ میٹیریل کی تعداد میں مسلسل اضافے نے گھر بنانے کے خواہشمند شہریوں کو مزید پریشان کر دیا ہے۔ 50 کلو سیمنٹ کی بوری میں 50 سے 60 روپے تک کا اضافہ کر دیا گیا جس کے بعد 50 کلو سیمنٹ کی بوری کی قیمت 550 سے 570 روپے ہو گئی ہے جبکہ سریہ 5 سے 7 روپے فی کلو اضافے کے بعد اب 84 روپے فی کلو فروخت ہونے لگا ہے۔
یہی نہیں ریت کی ایک ٹرالی میں 5 سو روپے تک کا ہوشربا اضافہ اور فی فُٹ بجری کی قیمت میں 10 روپے کا اضافہ بھی ہوا۔ شہریوں نے بلڈنگ میٹیریل کی قیمتوں میں مسلسل اضافے پرتشویش کا اظہار کیا اور کہاکہ حکومت اور دیگر ریگولیٹری اتھارٹیز بلڈنگ میٹریل میں اس مسلسل اضافے کا نوٹس لیں ، تاکہ ایک عام شہری کا اپنا چھوٹا سا گھر بنانے کا خواب پورا ہو سک

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں