فلائی دبئی کی انتطامیہ کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق فلائی دبئی آپریشنل مسائل کی وجہ سے سعودی عرب کے تین شہروں الجوف ، ینبع اور الحفوف کے لیے تین اپریل سے اپنی پروایں بند کر رہی ہے۔ یاد رہے کہ فلائی دبئی ابوظہبی ریاست میں کام کرنے والی بین الاقوامی فضائی کمپنیوں میں سے ایک ہے ، جوکہ ریاست کے دس شہروں میں اپنی سہولیات فراہم کر رہی ہے۔گزشتہ سال فلائی دبئی سے 10.9 سعودی شہریوں نے سفر کیا اور فلائی دبئی کے پاس اس وقت 295جہاز ہیں جو کہ دنیا میں مختلف جگہوں پر سہولیات فراہم کر رہے ہیں

فلائی دبئی کا سعودی عرب کے لیے پروازیں بند کرنے کا اعلان

فلائی دبئی کا سعودی عرب کے لیے پروازیں بند کرنے کا اعلان

فلائی دبئی کی انتطامیہ کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق فلائی دبئی آپریشنل مسائل کی وجہ سے سعودی عرب کے تین شہروں الجوف ، ینبع اور الحفوف کے لیے تین اپریل سے اپنی پروایں بند کر رہی ہے۔ یاد رہے کہ فلائی دبئی ابوظہبی ریاست میں کام کرنے والی بین الاقوامی فضائی کمپنیوں میں سے ایک ہے ، جوکہ ریاست کے دس شہروں میں اپنی سہولیات فراہم کر رہی ہے۔گزشتہ سال فلائی دبئی سے 10.9 سعودی شہریوں نے سفر کیا اور فلائی دبئی کے پاس اس وقت 295جہاز ہیں جو کہ دنیا میں مختلف جگہوں پر سہولیات فراہم کر رہے ہیں
فلائی دبئی کی انتطامیہ کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق فلائی دبئی آپریشنل مسائل کی وجہ سے سعودی عرب کے تین شہروں الجوف ، ینبع اور الحفوف کے لیے تین اپریل سے اپنی پروایں بند کر رہی ہے۔
یاد رہے کہ فلائی دبئی ابوظہبی ریاست میں کام کرنے والی بین الاقوامی فضائی کمپنیوں میں سے ایک ہے ، جوکہ ریاست کے دس شہروں میں اپنی سہولیات فراہم کر رہی ہے۔گزشتہ سال فلائی دبئی سے 10.9 سعودی شہریوں نے سفر کیا اور فلائی دبئی کے پاس اس وقت 295جہاز ہیں جو کہ دنیا میں مختلف جگہوں پر سہولیات فراہم کر رہے ہیں
فلائی دبئی کی انتطامیہ کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق فلائی دبئی آپریشنل مسائل کی وجہ سے سعودی عرب کے تین شہروں الجوف ، ینبع اور الحفوف کے لیے تین اپریل سے اپنی پروایں بند کر رہی ہے۔
یاد رہے کہ فلائی دبئی ابوظہبی ریاست میں کام کرنے والی بین الاقوامی فضائی کمپنیوں میں سے ایک ہے ، جوکہ ریاست کے دس شہروں میں اپنی سہولیات فراہم کر رہی ہے۔گزشتہ سال فلائی دبئی سے 10.9 سعودی شہریوں نے سفر کیا اور فلائی دبئی کے پاس اس وقت 295جہاز ہیں جو کہ دنیا میں مختلف جگہوں پر سہولیات فراہم کر رہے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں